پہل

ﺍﯾﮏ ﺁﺩﻣﯽ ﮔﺪﮬﺎ ﺭﯾﮍﮬﯽ ﭘﺮ ﺷﯿﺸﮧ ﻟﮯ ﮐﺮ ﺟﺎ ﺭﮨﺎ ﺗﮭﺎ ﮐﮧ ﺳﮍﮎ ﭘﺮ ﺍﯾﮏ ﮐﮭﻠﮯ ﮔﭩﺮ ﮐﯽ ﻭﺟﮧ ﺳﮯ ﺍﺱ ﮐﯽ ﺭﯾﮍﮬﯽ ﺍﻟﭧ ﮔﺌﯽ ﺍﻭﺭ ﺳﺎﺭﺍ ﺷﯿﺸﮧ ﭨﻮﭦ ﮔﯿﺎ.. ﻭﮦ ﻏﺮﯾﺐ ﻓﭧ ﭘﺎﺗﮫ ﭘﺮ ﺳﺮ ﭘﮑﮍ ﮐﺮ ﺑﯿﭩﮫ ﮔﯿﺎ ﺍﻭﺭ ﺭﻭﻧﮯ ﻟﮕﺎ ﮐﮧ ﻣﺎﻟﮏ ﮐﻮ ﮐﯿﺎ ﺟﻮﺍﺏ ﺩﻭﮞ ﮔﺎ..

ﻟﻮﮒ ﺍﺱ ﮐﮯ ﺍﺭﺩ ﮔﺮﺩ ﮐﮭﮍﮮ ﮨﻮﮔﺌﮯ ﺍﻭﺭ ﮨﻤﺪﺭﺩﯼ ﺗﺴﻠﯽ ﺩﯾﻨﮯ ﻟﮕﮯ.. ﺍﺗﻨﮯ ﻣﯿﮟ ﺍﯾﮏ ﺑﺰﺭﮒ ﺁﮔﮯ ﺑﮍﮬﮯ ﺍﻭﺭ ﺳﻮ ﺭﻭﭘﮯ ﺍﺱ ﮐﮯ ﮨﺎﺗﮫ ﭘﺮ ﺭﮐﮭﺘﮯ ﮨﻮﺋﮯ ﮐﮩﻨﮯ ﻟﮕﮯ.. ” ﺑﯿﭩﺎ ! ﺍﺱ ﺳﮯ ﻧﻘﺼﺎﻥ ﺗﻮ ﭘﻮﺭﺍ ﻧﮩﯿﮟ ﮨﻮﮔﺎ ﻟﯿﮑﻦ ﺭﮐﮫ ﻟﻮ..”

ﺑﺰﺭﮒ ﮐﯽ ﺩﯾﮑﮭﺎ ﺩﯾﮑﮭﯽ ﺑﺎﻗﯽ ﻟﻮﮔﻮﮞ ﻧﮯ ﺑﮭﯽ ﺍﺱ ﮐﮯ ﮨﺎﺗﮫ ﭘﺮ ﺳﻮ ﭘﭽﺎﺱ ﮐﮯ ﻧﻮﭦ ﺭﮐﮭﻨﮯ ﺷﺮﻭﻉ ﮐﺮﺩﺋﯿﮯ.. ﺗﮭﻮﮌﯼ ﮨﯽ ﺩﯾﺮ ﻣﯿﮟ ﺷﯿﺸﮯ ﮐﯽ ﻗﯿﻤﺖ ﭘﻮﺭﯼ ﮨﻮﮔﺌﯽ..

ﺍﺱ ﻧﮯ ﺳﺐ ﮐﺎ ﺷﮑﺮﯾﮧ ﺍﺩﺍ ﮐﯿﺎ ﺗﻮ ﺍﯾﮏ ﺷﺨﺺ ﺑﻮﻻ” ..ﺑﮭﺌﯽ ﺷﮑﺮﯾﮧ ﺍﻥ ﺑﺰﺭﮒ ﮐﺎ ﺍﺩﺍ ﮐﺮﻭ ﺟﻨﮭﻮﮞ ﻧﮯ ﮨﻤﯿﮟ ﯾﮧ ﺭﺍﮦ ﺩﮐﮭﺎﺋﯽ ﺍﻭﺭ ﺧﻮﺩ چپکے سے چل دیئے.. ” ہم ﺳﺐ ﮨﯽ ﺍﭘﻨﮯ ﻃﻮﺭ ﭘﺮ ﻧﯿﮑﯽ ﮐﺎ ﮐﺎﻡ ﮐﺮﻧﺎ ﭼﺎﮨﺘﮯ ﮨﯿﮟ ﻟﯿﮑﻦ ﺳﻮﺍﻝ ﯾﮧ ﮨﮯ ﮐﮧ ﭘﮩﻼ ﻗﺪﻡ ﮐﻮﻥ ﺑﮍﮬﺎﺋﮯ ..؟ راستہ کون دکھائے ؟

ﺁئیے ﻋﮩﺪ ﮐﺮﯾﮟ ﮐﮧ ﭘﮩﻼ ﻗﺪﻡ ﺑﮭﯽ ﮨﻢ ﻧﮯ ﺍﭨﮭﺎﻧﺎ ﮨﮯ ﺍﻭﺭ ﺭﺍﺳﺘﮧ ﺑﮭﯽ ﮨﻢ ﻧﮯ ﺩﮐﮭﺎﻧﺎ ﮨﮯ.. ان شاء اللّٰہ.

Advertisements

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ لاگ آؤٹ / تبدیل کریں )

Connecting to %s